عنوان صفحہ
تقریراً
 لفظ’’طلاق دی‘‘ دو دفعہ بولنے کے بعد کہنا کہ اب کیا رہا میرے اوپر حرام ہو گئی ۱۵
 محض مبہم لفظ بولنے سے طلاق کا حکم نہیں لگتا ۱۶
 ’’جا تو اپنے گھر چلی جا اور طلاق منگا لے،جب تیرا جی چاہے‘‘کہنے کا حکم ۱۶
 جملہ ’’ اپنے ماں باپ کے گھر چلی جا‘‘ کہنے کا حکم ۱۷
 جملہ ’’ تو اپنے میکہ چلی جائو‘‘ اور جملہ ’’ میں تم سے عاجز ہوں تعلق ختم کر چکا ہوں‘‘
کہنے کا حکم ۱۸
 لفظ ’’ختمی ختما‘‘ بول دینے کا حکم ۲۰
 تو اپنے باپ کے گھر چلی جا، میرا تیرا کوئی تعلق نہیں، اور نہ تو میری بیوی ہے
جملے کہہ دینے کا حکم ۲۱
 ’’ تو میرے گھر سے اپنے میکے چلی جا‘‘ تیرا میرا نباہ نہ ہوگا، وغیرہ جملوں کا حکم ۲۲
 جملہ ’’ اب مجھ کو تم سے کوئی ضرورت نہیں ہے ‘‘ اور تم اپنے میکہ چلی جائو، کہنے کا حکم ۲۴
 لفظ ’’ جا تجھے طلاق ہے‘‘ کہنے کے بعد جملہ ’’ تو کمینی میرے گھر سے نکل ‘‘
بار بار کہنے کا حکم ۲۵
 نکل جا، نکل جا، میرے گھر سے۔ طلاق ہے،طلاق ہے، طلاق ہے، طلاق ہے،
کہہ دینے کا حکم ۲۶
 غصہ میں ’’ تو یہاں سے چلی جا‘‘ کہہ دینے کا حکم ۲۷
 غصہ میں جملہ ’’ اب تمہیں صاف کر دی، یہاں سے چلی جائو‘‘ کہہ دینے کا حکم ۲۸
 ’’ تو چاہے جہاں چلی جا، اب مجھے تیری کوئی ضرورت نہیں‘‘ وغیرہ جملہ کہنے کا حکم ۲۹
 جملہ ’’ ایک دو تین، تم یہاں سے چلی جائو‘‘ کہہ دینے کا حکم ۳۲
 بیوی کو ’’ ماں‘‘ کہہ دے تو کیا حکم ہے ۳۳
 بیوی کو ’’بہن‘‘ کہہ دینے کا شرعی حکم ۳۳
 بیوی سے کہنا کہ ’’ میں ایسا رکھوں جیسے بہن کو رکھوں‘‘ ۳۴
 بیوی کا شوہر کو بھیا اور شوہر کا بیوی کو بہن سمجھ لینے کا حکم ۳۴
 جملہ ’’ ہم لڑکی نہیں لے جائیں گے‘‘ کہنے کا حکم ۳۵
 جملہ ’’ بیوی کو نہیں رکھونگا‘‘ متعدد لوگوں کے سامنے کہہ دینے کا حکم ۳۶