پہلی فصل:نور محمدی ﷑
پہلی روایت: ﷑
حضرت جابر﷜ فرماتے ہیں : میں نے رسول اللہ ﷑سے عرض کیا: میرے ماں باپ آپ پر قربان ہوں !مجھے بتائیے کہ اللہ تعالیٰ نے سب سے پہلے کس چیز کو پیدا کیا؟ آپ ﷑نے ارشاد فرمایا: جابر! اللہ تعالیٰ نے سب سے پہلے اپنے نور (کے فیض)سے تمہارے نبی ﷑کے نور کو پیدا کیا۔ پھر وہ نور، جہاں اللہ تعالیٰ نے چاہا ،سیر کرتا رہا۔ اس وقت نہ لوح تھی نہ قلم ، نہ جنت تھی نہ جہنم ، نہ آسمان تھا نہ زمین ، نہ سورج تھا نہ چاند،نہ فرشتے، نہ جن ، نہ ہی انسان ۔ جب اللہ تعالیٰ نے مخلوق کو پیدا کرنا چاہا تو اس نور کے چارحصے کیے۔ ایک حصے سے قلم ،دوسرے سے لوح اور تیسرے سے عرش پیدا کیا۔ الخ (رواه عبدالرزاق بسنده عن جابر)
فائدہ: اس حدیث سے ثابت ہوا کہ سب سے پہلے نور محمدی ﷑کو پیدا کیا گیا۔نیز جن چیزوں کے بارے میں احادیث میں یہ آیا ہے کہ انہیں پہلے پیدا کیا گیا ہے ،