ہبہ واپس لینا
مسئلہ(۵۲۴): کسی نے اجنبی شخص کو ہبہ کیا ، پھر واپس لے لیا ، تو ہبہ کا واپس لینا درست تو ہے (۱)، مگر مکروہِ تحریمی ہے ۔(۲)
------------------------------
الحجۃ علی ما قلنا :
(۱) ما في ’’ مجمع الأنہر ‘‘ : یصح الرجوع فیہا کلا أو بعضاً ویکرہ ویمنع ۔ (۳/۴۹۹)
ما في ’’ تبیین الحقائق ‘‘ : قال رحمہ اللّٰہ تعالی : صح الرجوع فیہا ۔
(۴/۶۱، باب الرجوع في الہبۃ)
ما في ’’ بدائع الصنائع ‘‘ : ہي ثبوت ملک غیر لازم في الأصل وللواہب أن یرجع في ہبتہ ۔
(۵/۱۸۲)
(۲) ما في ’’ الہدایۃ ‘‘ : وإذا وہب ہبۃ لأجنبي فلہ الرجوع فیہا ۔۔۔۔۔ وقولہ في الکتاب فلہ الرجوع لبیان الحکم أما الکراہۃ فلازمۃ لقولہ علیہ السلام : ’’ العائد فی ہبتہ کالعائد في قیئہ‘‘ ۔ وہذا الاستقباح ۔ (۳/۲۸۹ ، باب ما یصح الرجوع وما لا یصح)