{۲۴۱۷} عمدہ جانور کو چھوڑ کر ادنیٰ جانور کی قربانی کرنا
سوال: ایک شخص ہے جس پر قربانی فرض ہے اس کے گھر میں عمدہ اور فربہ جانور ہے لیکن قربانی جس پر واجب ہے وہ شخص اس بہترین جانور کو چھوڑ کر ادنیٰ درجہ کا جانور خرید کر اپنے ذمّہ سے واجب ادا کرتا ہے اس کے گھر میں جو جانور ہے اس کی اللہ کی راہ میں قربانی نہیں کرنا چاہتا اور خرید کر لائے ہوئے جانور سے گھر والوں کا دل ذرا بھی مطمئن نہیں ہے تو اس صورت میں جس پر قربانی فرض ہے اس کی قربانی صحیح ہوگی یا نہیں ؟
الجواب: حامداً و مصلیاً و مسلماً… بہتر اور زیادہ ثواب تو اس میں ہے کہ خود اپنے پالے ہوئے عمدہ اور پسندیدہ جانور کی اللہ کی راہ میں قربانی کی جائے، لیکن اگر کوئی شخص ایسا نہ کرے اور دوسرا جانور خرید کر ذمّہ سے واجب ادا کرتاہے تو اس جانور کی قربانی صحیح ہو جائے گی اور واجب ذمّہ سے ادا ہو جائے گا لیکن ثواب میں کمی ہو گی۔ (عالمگیری)
{۲۴۱۸} قربانی کے جانور کو کتا کاٹ لے تو کیا حکم ہے؟
سوال: ہم نے قربانی کی نیت سے ایک بکرا پالا تھا ،اس کی عمر دو سال تھی،اتفاق سے اس کو کتے نے کاٹ لیاہم نے اس کو دستور کے مطابق ۱۴؍ انجکشن دیدئے ہیں ،البتہ ہمیں اس بات کا علم نہیں ہے کہ بکرے کو اچھے کتے نے کاٹا ہے یا پاگل کتے نے؟ فی الحال بکرا تندرست ہے اور ظاہراً کوئی عیب معلوم نہیں ہوتا، آج کتے کو کاٹے ہوئے ۱۷؍ دن ہو گئے ہیں ، تو اب وہ بکرا قربانی کے کام آسکتا ہے یا نہیں ؟ برائے مہربانی فوراً جواب دے کر ممنون فرمائیں ؛ کیوں کہ عید کے ایام قریب ہیں اس لئے مہربانی فرما کر جلد جواب دیں ؟
الجواب: حامداً و مصلیاً و مسلماً… ۔ قربانی کے دن تک اگر بکرے میں پاگل پن کا کوئی