سورت وغیرہ کچھ نہ پڑھیں بلکہ خاموش رہیں۔
٭--اُس کے بعد ”اَللہُ أَكْبَرُ“کہتے ہوئے رکوع کریں یعنی کمر کو جھکائیں اور اپنی اُنگلیاں کھول کر اُن سے گھٹنے پکڑلیں ،پیٹھ کو بالکل سیدھا رکھنے کا اہتمام کریں ،سر کو پیٹھ کی سیدھ میں رکھیں،نہ اُٹھاکر رکھیں کہ سامنےنظرآئے اور نہ اِتنا جھکائیں کہ ٹھوڑی سینے سے لگ جائے۔
٭--پھر رکوع کی تسبیح:”سُبْحَانَ رَبِّی الْعَظِیْم“3،5 یا 7 مرتبہ پڑھیں۔
٭--پھر تسمیع،یعنی:”سَمِعَ اللّٰہُ لِمَنْ حَمِدَہ“کہتے ہوئے اچھی طرح سیدھے کھڑے ہوجائیں اور تحمید،یعنی:”رَبَّنَا لَكَ الْحَمْدُ“کہیں۔
اِمام کے پیچھے نماز پڑھنے کی صورت میں صرف”رَبَّنَا لَكَ الْحَمْدُ“کہیں،اِس صورت میں”سَمِعَ اللّٰہُ لِمَنْ حَمِدَہ“نہیں کہا جائےگا۔
٭--پھر ”اَللہُ أَكْبَرُ“ کہتے ہوئے سجدے میں چلے جائیں،سجدہ میں جاتے ہوئے پہلے دونوں گھٹنے پھر دونوں ہاتھ پھر ناک اور پھر آخر میں پیشانی زمین پر رکھیں ۔ سجدہ میں چہرہ دونوں ہتھیلیوں کے درمیان اِس طرح رکھیں کہ دونوں ہاتھوں کے انگوٹھے کانوں کے مقابل آجائیں۔سجدے میں ہاتھوں کی انگلیوں کو ملاکر رکھیں، کہنیاں پسلیوں سے اور پیٹ رانوں سے الگ رہنا چاہیئے۔