سب سے پہلے ابراہیم علیہ السلام کے بال سفیدہوئے
روایت میں ہے کہ سب سے پہلے حضرت ابراہیم علیہ السلام کے بال سفیدہوئے اس وقت تک دنیامیں کسی انسان کے بال سفیدنہیں ہوئے تھے حضرت ابراہیم علیہ السلام نے آئینہ دیکھا بڑا تعجب ہواکہاکہ یہ بال کیسے سفیدہوگئے اللہ سے عرض کیا اے اللہ ! یہ کیاہے ؟ اللہ تعالیٰ نے ارشادفرمایاکہ یہ ہمارانورہے اورفرمایاکہ ہمیں یہ بات پسندنہیں آئی کہ کوئی ہمارے خلیل کوذبیح کہہ کرپکارے اسلئے ہم نے سفیدبال پیدافرمادیئے تاکہ لوگوں کومغالطہ نہ ہو،تو ابراہیم علیہ السلام کی یہ خصوصیت ہے کہ سب سے پہلے دنیامیں آپ کے بال سفیدہوئے گویااللہ تعالیٰ نے آپ کوبزرگی مسلّم طورپر عطافرمائی تھی ظاہری طورپربھی اورباطنی طورپربھی ،رسالت کے اعتبارسے بھی اورانسانیت کے اعتبارسے بھی ۔
اللہ تعالیٰ نے حضرت ابراہیم علیہ السلام کو امامت عطافرمائی اورآنے والی نسل کا امام بنایااللہ تعالیٰ نے نبیوں کی یادگارکوکسی نہ کسی طریقہ پرقائم رکھاہے لیکن ابراہیم علیہ السلام کی مبارک زندگی کے بہت سے احوال اوربہت سی چیزوں کواللہ تعالیٰ نے زندہ رکھاہے ، ابراہیم ہی وہ مبارک شخصیت ہیں کہ ان کے ہاتھوں سے اپنامبارک گھر تعمیرکرایا، اِنَّ اَوَّلَ بَیْتٍ وَّوُضِعَ لِلنَّاسِ لَلَّذِیْ بِبَکَّۃً مُّبَارَکاَ وَّھُدَی لِّلْعَالَمِیْنَ سب سے پہلا گھر جو لوگوں کی عبادت کیلئے بنایاگیا وہ مکہ میں ہے جو ساری دنیاکیلئے ہدایت کاباعث، برکتوں اوررحمتوں کاسبب ہے، ابراہیم علیہ السلام کے دست مبارک سے تعمیرکیاہواخانہ کعبہ کواللہ نے اپناگھرقراردیاہے ، اللہ تعالیٰ کوحضرت ابراہیم علیہ السلام کی ادائیں اتنی پسندآئیں کہ ان کے حالات کو قرآن کریم میں ذکر فرمایاکہ ہمارے محبوب  صلی اللہ علیہ وسلم ! ہم نے تمہیں دین حنیف عطافرمایا مِلَّۃَ اِبْرَاہِیْمَ حَنِیْفَا ابراہیم کی ملت پرپیدافرمایا۔