5: بدنظری کرنے کی وجہ سے شہوت کے ساتھ منی نکل آئے۔
6: بُرا خیال آنے سے کی وجہ سے شہوت کے ساتھ منی نکل آئے۔
7: مشت زنی سے منی نکل آئے، اگرچہ عام حالات میں مشت زنی کرنا سخت گناہ ہے۔
8: یا کسی اور وجہ سے شہوت کے ساتھ منی نکل آئے۔ (رد المحتار، حاشیۃ الطحطاوی علی المراقی)

منی نکلنےسے غسل کب فرض ہوتا ہے؟
منی نکلنے سے غسل اس وقت فرض ہوتا ہے جب وہ شہوت کے ساتھ اپنی خاص جگہ سے جدا ہوکر باہر نکل آئے ، اسی طرح اگر منی اپنی جگہ سے شہوت کے ساتھ تو جدا ہوگئی لیکن باہر آتے وقت شہوت نہیں تھی تب بھی غسل فرض ہوجاتا ہے۔ (رد المحتار، تبیین الحقائق، فتح القدیر)
مسئلہ: بعض لوگوں کی منی پتلی ہوتی ہے کہ اس میں گاڑھا پن زیادہ نہیں ہوتا، ایسی صورت میں اگر منی شہوت سے تو نکلے لیکن اچھل کود کر نہ نکلے تب بھی غسل فرض ہوجاتا ہے کیوں کہ شہوت سے منی نکل آنا ہی غسل کے لیے کافی ہوتا ہے، اور چوں کہ یہاں منی پتلی ہونے کی وجہ سے اس کے نکلنے میں اچھل کود کا پایا جانا مشکل ہوتا ہے اس لیے غسل فرض ہوجاتاہے۔(امداد الفتاویٰ، درمختار مع رد المحتار، البحر الرائق)

شہوت کے بغیر منی نکلنے کا حکم:
اگر کسی شخص کو شہوت کے بغیر ویسے ہی منی آئے تو اس سے غسل فرض نہیں ہوتا۔(رد المحتار)

منی، مذی اور ودی کی تعریف اور حقیقت:
1: ودی: یہ گاڑھے قطرے ہوتے ہیں جو کبھی تو پیشاب کے بعد نکلتے ہیں، کبھی غسلِ جنابت کے بعد اور کبھی کوئی بھاری چیز اٹھانے کے بعد نکلتے ہیں۔ (ہدایہ،موسوعہ فقہیہ،البحر الرائق، عالمگیری، امداد الفتاویٰ)
حکم: ودی سے غسل فرض نہیں ہوتا۔(رد المحتار)
2: مذی: وہ گاڑھا پانی جو شہوت اور جوش کے وقت نکلتا ہے لیکن اس سے شہوت اور جوش ٹھنڈا نہیں