حرف آغاز
سید محمود میاں
نَحْمَدُہ وَنُصَلِّیْ عَلٰی رَسُوْلِہِ الْکَرِیْمِ اَمَّا بَعْدُ !
گزشتہ چند ماہ سے جاری سوشل میڈیا پر ہندوستان کے جناب خالد محمد خان صاحب کی ایک مختصر سی تحقیقی تحریر نظر سے گزری جو پاکستان کے گرد منڈلانے والے خطرات سے کافی حد تک مطابقت بھی رکھتی ہے مگر قارئین ِ کرام کی خدمت میں یہ تحریر پیش کرنے سے ذرا پہلے ہم چاہیں گے کہ اپنے گھر کے اندر کا مختصر سا جائزہ بھی لے لیں تاکہ ہم خوب سے خوب تر گھر کے باسی ہونے کا اعزاز بھی حاصل کریں اور اس اعزز کو برقرار بھی رکھ سکیں۔
ایک افسوسناک حقیقت جو کسی پر مخفی بھی نہیں یہ ہے کہ ان جیسے خطرات کو بہت پہلے سے بھانپ کر ان کا سد ِ باب کر نے کے جو اِدارے ذمہ دار ہیں خود اُن ہی کے اندر ایسی کالی بھیڑیں بھی موجود ہیں کہ جن کا شعبدہ اچھے اچھوں کی آنکھیں چکا چوند کر کے خطرات اور سازشوں کو وقتی نشیب و فراز باور کروا کر اپنے مذموم ایجنڈے کو آگے سے آگے بڑھاتی چلی جا رہی ہیں یہ فرقہ پرست قادیانی اور آغاخانی وہ کالی بھیڑیں ہیں جو '' جعلی مسلمان'' ہیں ،اسلام اور پاکستان ان کا سب سے بڑا ہدف ہیں۔