بین الخطبتین دعا۔
الباب السادس عشر :فی صلاۃ العیدین
عیدگاہ میں باآواز تکبیر نہ کہی جائے۔
جماعت میں تفریق کرنے والے کی نماز ہوئی یا نہیں ۔
عیدگاہ کا خطبہ کسی نے دیا اور نمازکسی نے پڑھائی تو بھی نماز ہوگئی۔
عید فطرکے دن بوجہ بارش نماز عید نہ ہوسکے تو دوسرے دن پڑھی جائے۔
دو فریق نے دو جگہ نماز عید ادا کی تو بھی درست ہوگی۔
عیدین میں تکبیرات زوائد کی تعداد۔
عیدین کی نماز کے لئے باہر نکلنا سنت ہے۔
عیدین کی نماز کے بعد دعا
صلوٰۃ عیدین میں سجدہ سہو کا حکم اور فرض سے واجب کی طرف واپسی۔
عیدین میں بعد نماز دعا اور اس سلسلہ میں اکابر کا مسلک۔
خطبہ عیدین کی ابتداء تکبیر سے مستحب ہے۔
عادل گواہوں کی شہادت پر نماز عید۔
عیدین میں خطبہ کس جگہ سے دے۔
دوعا دل گواہ کی گواہی سے رویت ثابت ہوجاتی ہے۔
یوم النحر میں جملہ شرائط صوم کی رعایت مستحب ہے۔
عید کا خطبہ مختصر ہونا چاہئے اور خطبہ سننا واجب ہے۔
اچھا یہ ہے کہ خطیب و امام ایک ہی شخص ہو۔
چھ زوائد تکبیرات کا عیدمیں ثبوت۔
جو عیدگاہ آبادی کے بڑھنے سے آبادی کے اندر آگئی وہ صحرا کے حکم میں نہیں ہے۔
بچے جماعت عیدین میں کہاں کھڑے ہوں ۔
نماز عیدین میں عورتوں کی جماعت مکروہ ہے۔
قبرستان میں عید کی نماز جبکہ قبر سامنے نہ ہو۔
تکبیرات تشریق عورتوں کے لئے نہیں ہے۔
رکوع سے اٹھ کر تکبیرات زوائد کہنا۔
بلاعذر عید کی نماز دروازہ پر پڑھنا کیسا ہے؟