نہیں کرسکتا (۱) اگرچہ عزیز سے ہندہ کی دخترکا نکاح فاسد ہوگیا بوجہ اقرار عزیز کے ساتھ زنا ہندہ کے لیکن اگر وہ وطئ کرچکا ہے تو بدوں گزارنے عدت کے بعد متارکت کے دختر ہندہ کا نکاح دوسرے شخص سے درست نہیں ہے ۔ (۲) فقط
عورت نے جس نابالغ سے زناکیا اس سے اس کی لڑکی کا نکاح جائز ہے یا نہیں
(سوال ۵۸۱) ایک بیوہ عورت بالغہ نے ایک لڑکے نابالغ سے شہوت کے جوش میں فعل بد کیا اس عورت کے ایک لڑکی ہے اس لڑکے سے اس لڑکی کا نکاح ہوا یہ نکاح جائز ہوا یا نہیں ؟
(الجواب) اگر وہ لڑکا نابالغ مراہق تھا یعنی قریب البلوغ جسکی عمربارہ برس یا زیادہ کی تھی تو حرمت مصاہرت ثابت ہوگئی اور مزنیہ کی دختر سے نکاح اس لڑکے کا صحیح نہیں ہوا اس کو علیحدہ کردینا چاہئیے اور اگر وہ لڑکا نابالغ بارہ برس کا نہیں تھا یعنی مراہق نہ تھا تو حرمت مصاہرت اس سے ثابت نہیں ہوئی اور مزنیہ کے دختر سے اس لڑکے کا نکاح صحیح ہوگیا جیسا کہ درمختار میں ہے ۔ فلو جامع غیر مراہق زوجۃ ابیہ لم تحرم (۳)الخ وفیہ ایضاً و مراہق و مجنون و سکران کبالغ( درمختار) ای فی ثبوت حرمۃ المصاہرۃ بالوطئ اوالمس الخ شامی (۴) فقط
نو سالہ لڑکی جس کو شہوت سے چھوا‘ اس کی لڑکی سے نکاح جائز نہیں
(سوال ۵۸۲) زید نے ایک لڑکی نوسالہ کو شہوت سے چھوا تو زیداس ممسوسہ عور ت کی لڑکی سے نکاح کرسکتا ہے یا نہیں ؟
(الجواب) ممسوسہ بالشہوۃ کی دختر سے نکاح جائز نہیں ہے ۔ (۵) فقط
خسر زناسے انکارکرتا ہے بہو بیان کرتی ہے کیاحکم ہے ؟
(سوال ۵۸۳) ایک عورت عفیفہ قسم کھاکر کہتی ہے کہ میرے خسرنے میرے ساتھ تین چار مرتبہ زنا کیا میں شرم کی وجہ سے افشاء نہیں کرتی‘ اس کا خسر بھی بحلف کہتا ہے کہ میں ایسے فعل کا کبھی مرتکب
---------------------------
(۱) وحرم ایضاً بالصہریۃ اصل مزنیۃ اراد بالزنا الوطؤ الحرام ( الدرالمختار علی ہامش رد المحتار فصل فی المحرمات ص ۳۸۴ ج ۲۔ط۔س۔ج۳ص۳۲) ظفیر
(۲) و بحرمۃ المصاہرۃ لا یرتفع النکاح حتی لا یحل لہ التزوج بآخر الا بعد المتارکۃ و انقضاء العدۃ والوطی بہا لا یکون زنا ( ایضاً ص ۳۸۹ ج ۲۔ط۔س۔ج۳ص۳۷)ظفیر
(۳) الدرالمختار علی ہامش رد المحتار کتاب النکاح فصل فی المحرمات ص ۳۸۷ ج ۲۔ط۔س۔ج۳ص۳۶‘ لا بد فی کل منہمامن سن المراہقہ و اقلہ للانثی تسع وللذکر اثنا عشر لان ذلک اقل مدۃ یمکن فیہا البلوغ کما صرحوابہ فی باب بلوغ الغلام
(۴) دیکھئے رد المحتار کتاب النکاح فصل فی المحرمات ص ۳۸۹ ج۲۔ط۔س۔ج۳ص۳۶‘ ظفیر
(۵) و حرم ایضاً بالصہریۃ اصل مزنیتہ الخ و فروعہن مطلقاً ( الدرالمختار علی ہامش رد المحتار فصل فی المحرمات ص ۳۸۴ ج ۲۔ط۔س۔ج۳ص۳۲) و بنت تسع فصاعداً مشتہاۃ اتفاقاً (البحر الرائق فصل فی المحرمات ص ۱۰۶ ج ۳۔ط۔س۔ج۳ص۹۸) ظفیر